• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Published by Admin2 on 2012/9/14 (951 )
"کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ ایک پیرزادہ سیدصاحب نے نمازتراویح میں بہ یک سلام دس رکعت سفر کی حالت میں امامت سے پڑھادئے جماعت معترض ہوئی کہ نماز ناجائزہوئی۔ سیدصاحب نے کہا کہ منیۃ المصلی میں صاف طور پر بلاکراہت بیک سلام جائزہے وہ عبارت یہ ہے:ولوصلی التراویح کلھا بتسلیمۃ واحدۃ وقد قعد علی راس کل رکعتین جاز ولایکرہ لانہ اکمل، ذکرہ فی المحیط۔اگرتمام تراویح ایک سلام کے ساتھ اداکریں اور ہردورکعت کے بعد نمازی نے قعدہ کیاتوجائزہے مکروہ نہیں کیونکہ یہ اکمل ہے۔ محیط میں اس کوذکرکیاگیاہے۔(ت)
اس پرسیدصاحب کوبراکہنا اور نماز کو ناجائز وحرام کہنا ان کے حق میں کیساہے؟
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/9/14 (1002 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین ومفتیان شرع متین اس مسئلہ میں کہ نابالغ کے پیچھے نمازتراویح جائزیاناجائز اور جس حافظ کاسن چودہ سال کا ہو وہ بلوغ میں داخل ہے یاخارج؟ اور شرعاً حد بلوغ کی ابتداء ازروئے سن کےَ سال سے معتبرہے؟ بیّنواتوجروا
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (1093 )
چہ می فرمایند علمائے کرام دریں مسئلہ کہ غیرمقلدین نمازتراویح رابدعت عمری قراردادہ ازبست تخفیف نمودہ یازدہ رکعت میخوانند جائزاست یانہ؟ بیّنواتوجروا۔علماء کرام اس مسئلہ میں کیافرماتے ہیں کہ غیرمقلدین نے بیس۲۰تراویح کو بدعت عمر(رضی اﷲ تعالٰی عنہ) قراردیتے ہوئے ان میں تخفیف کرکے گیارہ کرلی ہیں، یہ جائز ہے یانہیں؟ بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (857 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ تراویح میں پورا کلام اﷲ تعالٰی سنناپڑھنا سنت مؤکدہ ہے یاسنت یامستحب وغیرہ؟ اور بعد سننے ایک پورے کلام اﷲ شریف کے جولوگ سورہ فیل سے آخر ک دوبارہ پڑھتے ہیں ان کاکیا حکم ہے یعنی ہررات رمضان شریف میں تراویح بست رکعتیں پڑھناسنت مؤکدہ یاسنت یامستحب وغیرہ ہے یاکیا ارشاد ہے؟ ایک رات اسی ماہ صیام میں طبیعت میری نادرست تھی تراویح ایک شب کی مجھ سے نہ ہوئیں اب ان کی قضاکروں یانہیں اور کروں تو کس وقت؟ بیّنوا توجوا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (783 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ تراویح میںبعد سورہ فاتحہ سورہ اخلاص پڑھنا جائز ہے یامکروہ باوجودیکہ امام اور سورتیں بھی جانتاہے؟ بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (756 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ تراویح میں ختم قرآن شریف کے لئے ایک بارجہرسے بسملہ پڑھناچاہئے یانہیں؟ فقط بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (967 )
"(۱) نمازتراویح کی جماعت اس طورپرکہ الم ترکیف سے شروع کرتے ہیں اور والناس تک ایک ایک سورہ ایک ایک رکعت میں پڑھتے ہیں اور پھر الم ترکیف سے والناس تک دوبارہ دس رکعتوں میں پڑھتے ہیں جائز ہے یانہیں؟
(۲) ہرترویحہ کے بعد دعامانگنا جائزہے یانہیں؟
(۳) کسی حافظہ کو اس طورپر نماز تراویح کی پڑھانی کہ پہلے ایسی قوم کے ساتھ جو آٹھ رکعتیں تراویح منفرد پڑھ چکے ہوں بارہ رکعتیں ختم تراویح پڑھاکر پھردوسری قوم کے پاس جوبارہ رکعتیں تراویح کی منفرد پڑھ چکے ہوں جاکر آٹھ رکعتیں تراویح کی ہرشب میں پڑھانی جائز ہیں یانہیں؟بیّنوا بالفقہ والسنۃ والکتاب تؤجروا من اﷲ حسن الماٰب(فقہ اور کتاب وسنت کے مطابق جواب عنایت کرکے اﷲ تعالٰی سے اجرعظیم پاؤ۔ت)
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (838 )
ایک شخص ایک مسجد میں فرض جماعت سے پڑھاکر تراویح بیس رکعت پڑھاتاہے پھروہی شخص دوسری مسجد میں تراویح بیس رکعت جماعت سے پڑھاتاہے آیا یہ امامت اس کی صحیح ہے نہیں؟ اور مقتدیان مسجد دیگر کی تراویح ہوجاتی ہے یانہیں؟ فقط۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (859 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین ومفتیان شرح متین اس مسئلہ میں کہ جواکثر جگہ رمضان شریف کے اخیر عشرہ کی طاق راتوں میں نوافل میں شبینہ پڑھاجاتاہے یعنی ایک یاایک سے زیادہ رات میں ختم قرآن عظیم ہوتاہے اور یہ نوافل باجماعت پڑھے جاتے ہیں یہ شرعاً جائزہے یانہیں؟ ایک صاحب فرماتے ہیں کہ اگرچہ کلام مجید باجماعت نوافل میں ترتیل کے ساتھ ہی کیوں نہ پڑھاجائے وہ بھی ممنوع ہے اور نیز کہتے ہیں کہ جماعت نوافل کی سوا تراویح کے اصلاً جائزنہیں ہے اور جس حدیث میں تہجد کے وقت ابن عباس رضی اﷲ تعالٰی عنہما کی شرکت نوافل تہجد میں آنحضرت صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم کے پیچھے مروی ہے وہ مثبت صرف اقتدا ایک شخص کی ہے تیسری بات وہ یہ کہتے ہیں کہ سنتیں فجر کی اگررہ جائیں اور فرضوں میں کوئی شامل ہوجائے تو پھر اس کو وہ سنتیں نہ قبل آفتاب پڑھنی چاہئیں نہ بعد میں، ان تینوں مسائل کوامید ہے کہ مشرح بیان فرمائیں۔ جزاک اﷲ خیرالجزاء۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (822 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ زیدنے فرض عشاء تنہا ادا کیا اور تراویح جماعت سے اب وترجماعت سے ادا کرناجائزہے یانہیں؟ اور اولٰی کیاہے؟ مع ادلّہ وحوالہ کتب بیان فرمایاجائے۔ بیّنواﷲ توجروا عنداﷲ ۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (730 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین ومفتیان شرع متین اس مسئلہ میں کہ ماہ رمضان شریف میں دوحافظوں نے ایک مسجد میں قرآن عظیم اس ترتیب سے سنایا کہ ایک حافظ نے اول مثلاً دس تراویح میں ایک یاسوا یا ڈیڑھ پارہ المـ سے سنایا اور پھردوسرے حافظ نے آخردس تراویح میں وہی پارہ ایک یا سوایاڈیڑھ المـ کاپڑھا یعنی ابتداء سے انتہا تک یہی طریقہ قرأت کا رکھا کہ جوکچھ پہلے حافظ نے پڑھا تھا وہی پارہ دوسرے حافظ نے پڑھا اور ایک ہی تاریخ پرمثلاً پچیس۲۵ یاچھبیس تک دونوں نے ختم قرآن کریم فرمایا پس ازروئے شرع مطہر کے یہ طریقہ قرآن شریف کے پڑھنے کاجائزہے یانہیں؟بیّنوابالکتاب تؤجروا بغیرحساب(کتاب وسنت سے جواب دیجئے اور بغیرحساب اجرپاؤ۔ت)
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (882 )
رمضان المبارک میں میں نے نمازعشاء جماعت سے نہیں پڑھی ہے مسجد میں جاتے وقت جماعت عشاء ہوگئی تھی اور نمازتراویح کی کھڑی تھی، میں نے جلدی سے نمازعشاء ادا کی اب تراویح کی جماعت میں شامل ہوکر نمازتراویح اداکرسکتاہوں یا نہیں؟ یا اکیلے پڑھناچاہئے؟
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (957 )
حضور والادست بستہ سلام مسنون کے بعد عرض ہے تابعدار بخیریت ہے خوشنودی مزاج اقدس درکار ازراہ شفقت مربیانہ معاف فرمایاجاؤں کہ آج سے پہلے عریضہ نہ لکھ سکا اور آج پھرجوموقع ملاہے وہ خاص ضرورت سے، براہ کرم شرع شریف کے مقدس قانون کے مطابق رائے صائب وحکم مناسب سے اطلاع بخشی جائے، میرے وطن اٹاوہ میں ایک بزرگ مفتی قوم میں سے ازراہ خیروبرکت ختم قرآن شریف کے دن بیسویں رکعت میں المـ تامفلحون پڑھنے کے بعد چند آیات مختلف ماکان محمد صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم وغیرہ کے ساتھ تراویح ختم کرنے کی ہدایت فرمایاکرتے ہیں لیکن اس زمانے کی نئی روشنی اس کے خلاف ہے لہٰذا اس کے جواز کے متعلق جوآیات شریفہ کتب احادیث سے پائی جائیں اُن سے اطلاع بخشی جائے تاکہ مخالفین کو سمجھادی جائیں، براہ کرم و شفقت مربیانہ بواپسی ڈاک جواب باصواب عریضہ ہذا سے شادفرمایاجائے کیونکہ اس کی یہاں فوری ضرورت ہے، فقط
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/8 (847 )
جناب فیض انتساب فضائل مآب جناب مولانا صاحب زاد فضلکم بعد آداب گزارش ہے کہ جو شخص صوم وصلوٰۃ کاپابند ہے مگر تراویح قصداً چھوڑدیتاہے اس کے واسطے وعید ہے یانہیں؟ اور یہ بھی تحریرکریں کہ حضرت ابوبکر رضی اﷲ تعالٰی عنہ نے کیوں نہیں پڑھیں؟ ان پروعید ہے یانہیں؟
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/11 (874 )
جب احقرکاحافظہ ہوگاہ تو لوگوں نے اسی سے پڑھوایا مسجد کے پش امام صاحب نے بخوشی صـ۵ــہ پانچ روپے احقرکوعنایت کئے جسے احقرنے اُسی وقت اپنے استاد مکرم کی نذرکردی مرپے ایک مکتبی بھائی کی خواہش تھی کہ ان پانچ مں سے چندہ تبرک مں کچھ دوں مگرحضرت استاذی کی حالت بمقابلہ تبرک قابل ترجحر معلوم ہوئی لہٰذا مںے نے چندہ تبرک مںی کچھ دوں مگر حضرت استاذی کی حالت بمقالہ تبرک قابل ترجحس معلوم ہوئی لہٰذا مںو نے چندہ تبرک مںب اس مںے سے کچھ نہ دیا دوسرے سال معلوم ہوا کہ اب کے سال امام صاحب معـــ۷ ــہ دیں گے پھرسناگا کہ صـ۵ــہ ہی دیں گے، اس پرقوی خالل کی بنا پرسمجھاگاب کہ انہں مکتبی بھائی صاحب کی بدولت پانچ کردیا گاہہے جن کی غرض کے مطابق چندہ تبرک مںک نے نہں دیاتھا اس لئے مںد نے ان سے شکایت کی کہ استاذ مر ے بھی ہںس اور آپ کے بھی، پھر آپ ان کی بھلائی کے بجائے ان کی نقصان رسانی کے درپے کو ں ہں ؟ اس پربات بڑھی اور امام صاحب مسجد کے کانوں تک پہنچی، اس کے بعد مجھے روپے کی گفتگو پرسخت افسوس ہو اور دل مںس خطرہ پدااہوا کہ کہںب مر اثواب نہ زائل ہو جائے اس لئے مںب نے باعلان کہا کہ صاحبو مںد کوئی اُجرت نہںد مقررکرتا، یہ جس قدرباتںر ہوئی ہں بھائی صاحب سے بات بڑھ جانے کے سبب ہوئںی، پھرختم کے دن امام صاحب نے سات ہی روپے دئےں جنہںک لتےہ وقت احقرکے دل کی عجبو حالت تھی مگربخا ل نفع استاد مکرم لے لئے اور اسی وقت اُن کی خدمت مںر پشی کردیا تاہم مجھے ہروقت اس کاخطرہ رہتاہے کہ گو ہم اپنے لئے نہںت لتےب پھربھی لتےر ہںا۔ لکن اس خا ل سے کہ اب استاذمکرم کوبھروسا رہتاہوگا کہ اسے سات روپے ملںے گے اور یہ مجھے دے گا اور پھر اس سے مررافلاں فلاں کام چلے گا لنےس سے انکار کرتے بھی نہںس بنتا۔ شبنہو کسا ہے جوایک دن مں چندحفاظ مل کرختم کرتے ہںھ۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/11 (1424 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ تراویح کے ہر چار رکعت پرہاتھ اٹھاکر دعامانگناچاہئے یاصرف تسبیح بلاہاتھ اٹھائے پڑھے ؟
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/11 (915 )
ایک شخص جو اپنے کو اہلسنت سے کہتا ہے اس کاقول ہے کہ نماز تراویح کے اندر دوچیزیں ہیں ایک قرأت قرآن مجید کی جوکہ فرض ہے اور دوسری تراویح سنت مؤکدہ ۔ جب نماز تراویح میں قرآن شریف پڑھاگیا تودونوں مذکورہ بالاچیزوں سے ایک ادا ہوئی ایک باقی رہ گئی ہے یعنی تراویح سنت مؤکدہ کا ثواب توحاصل ہوا مگرقرأت کے ثواب سے محروم رہ گیا جوکہ فرض ہے اس لئے جماعت کے لوگ بعدنماز تراویح کے بیٹھ جائیں کسی سے قرآن شریف سن لیں تاکہ دونوں ثواب حاصل ہوجائیں، کیایہ قول زید کاصحیح ہے؟
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/11 (826 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ قرآن شریف کے اندر جو ایک سوچودہ سورتیں ہیں اگر حافظ قرآن تراویح میں ہرسورۃ میں بسم اﷲ شریف پڑھے توجائز ہے یانہیں؟ یاکیانفع نقصان ہے؟ ایک شخص یہاں پر ہرسورہ میں بسم اﷲ شریف ظاہرکرکے پڑھتے ہیں تواُن پراعتراض واجب ہے یانہیں؟ ان سے کہتے ہیں کہ آپ ہرسورہ میں بسم اﷲ شریف پڑھتے ہیں ہم نے کسی حافظ اور عالم کوظاہرکرکے بسم اﷲ پڑھتے ہوئے نہیں دیکھا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/11 (893 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ نمازتراویح حافظ کے نہ ہونے سے سورہ الم ترکیف سے پڑھی جائیں بیس رکعت، لیکن اس طریق سے کہ ایک ایک رکعت میں ایک سورۃ دوسری میں قل ھواﷲ یہاں تک کہ بیس رکعت میں نو سورہ الم ترکیف سے اور گیارہ سورہ قل ھواﷲ پڑھی جائیں مگرگیارہویں رکعت میں جبکہ سورہ اذا جاء پڑھی جائے اور بارہویں میں قل ھو اﷲ توایک سورہ تبت بیچ میں رہ جاتی ہے اور اسی طرح سے جب انیسویں رکعت میں قل ھواﷲ اور بیسویں میں ناس توفلق رہ جاتی ہے اس صورت میں کچھ کراہت ہے یانہیں؟ بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/11 (1568 )
"کیافرماتے ہیں علمائے دین ومفتیان شرع متین اس مسئلہ میں کہ شبینہ پڑھنا یعنی ایک شب میں قرآن مجید ختم کرنا تراویح یا تہجد یانفل میں جائز ہے یانہیں اور جوشخص اس طرح پرکہ نہایت صحت اور قواعد کے ساتھ صاف صاف پڑھتاہے اس کی اقتداء میں اگرکچھ لوگ ذوق وشوق اور خلوص وہمت سے داخل ہوکرشرکت کریں تو ان مقتدیوں اور امام کی بابت کیاحکم ہے، زید کہتاہے کہ شبینہ مطلقاً ناجائزہے اس کی کوئی اصل نہیں بلکہ حرام ہے صحابہ و تابعین وتبع تابعین کے زمانہ میں کبھی نہیں ہوا، اور یہ جوبعض بزرگوں کی نسبت مشہور ہے کہ فلاں بزرگ نے ایک رات میں اتنے اتنے ختم کئے بالخصوص حضرت سیدنا امام اعظم رحمۃ اﷲ تعالٰی علیہ کی نسبت وہ مخص خصوصیات ہیں اُن کا یہ فعل ہمارے لئے حجت نہیں ہے، بکرکہتاہے کہ نفس شبینہ جائز اورمباح ہے بلکہ بزرگان دین کامعمول ہے یہ اور بات ہے کہ اگرمنہیات شرع اس میں شامل ہوں یالوگ اس کو اچھی طرح نہ سنیں بلکہ اس و قت بیٹھے باتیں کریں یاحقہ اورچائے پینے میں مشغول رہیں یاقرآن مجیدایساغلط اور جلدجلد پڑھاجائے کہ سمجھ میں نہ آئے توبیشک ایسی صورت ناجائز ہوگی بلکہ ایسی صورت اگر تراویح میں واقع ہوتوتراویح کے لئے کیاحکم نہ ہوگا کیانفس تراویح ان عوارض کی وجہ سے ناجائز ٹھہرے گی؟ زیدکہتاہے شبینہ پڑھنے والے اور سننے والے کوپانسو جوتے لگانے چاہئیں، امسال رمضان مبارک ۱۳۳۹ھ میں ہم چند مسلمانانِ مین پوری نے اپنے اپنے ذوق وشوق سے چند حافظ بلوائے جونہایت عمدہ اور صاف پڑھنے والے تھے نہ کسی پربار ہواسب نے نہایت مستعدی اور سکون سے سنا اس پر زیدکو بہت غصہ آیا زید امام جامع مسجد ہے انہوں نے بالاعلان ہم سب مسلمانوں پراسی جامع مسجد میں بعد نمازمغرب مصلے پرکھڑے ہوکر ماں بہن کی گالیاں دیں اور کہا شبینہ سننا اور وہاں جانا سب گناہ ہے کوئی شبینہ کوجائز ثابت کردکھائے تو پچاس روپیہ دوں گا ایسے شخص کی نسبت جو اس قسم کے سب وشتم مسلمانوں کو دے بازاری اور فحش کلمات اس کے زبان زدرہتے ہوں اور مسلمانوں کوجو اس کے مقتدی نہیں ماں بہن کی گالیاں دے، چنانچہ اس بنا پر وہ کل مقتدی اس سے ناخوش ہوں اس کی امامت کا کیاحکم ہے؟ بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/15 (816 )
حضور والابرکت دامت برکاتہم بعدسلام ونیاز غلامانہ معروض حافظ نے تراویح میں فاتحہ اور سورہ توبہ کے درمیاناعوذ باﷲ من النار ومن شر الکفار الخبالجہر قصداً پڑھا اب دریافت طلب یہ امرہے کہ نمازہوئی یانہیں؟ اور ہوئی تو کیسی؟ اگرنماز واجب الاعادہ ہوتو ان دونوں رکعتوں میں جوقرآن پڑھاگیاختم کے پوراہونے میں اس کااعادہ بھی ضرورہے یاکیا؟
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/15 (790 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین ومفتیان شرع متین اس مسئلہ میں کہ جو شخص کہے کہ نمازتراویح میں قرآن شریف کے سننے سے ذکر ولادت باسعادت آنحضرت صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم کا سننا اچھاہے، آیا یہ شخص غلطی پرہے یانہیں؟ بحوالہ کتب تحریرفرمائیں۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/15 (799 )
چہ می فرمایند علمائے دین ومفتیان شرع متین اندرین مسئلہ کہ درماہ رمضان المبارک جماعت وترنہ نمودن وہرروز ازجماعت موجودہ بیروں رفتن شرعاً جائز است یانہ وتارکِ جماعت وتررافاسق وفاجر و غیرآں خواند شودیانہ؟ حسب شرع چہ حکم ست۔ بیّنوتوجروا۔اس مسئلہ میں علمائے دین کیافرماتے ہیں کہ ماہ رمضان میں جماعت وتر میں شرکت نہ کرنا اور ہرروز جماعت موجودہ سے باہر چلاجانا شرعاً جائز ہے یانہیں؟ وتر کی جماعت کے تارک کوفاسق وفاجر وغیرہ کہاجاسکتاہے یانہیں؟ شریعت کاحکم کیاہے؟ بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/15 (797 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ یہ کچھ قید ہےکہ نماز وتر کی تیسری رکعت میں سورہ فاتحہ کے ساتھ سورہ اخلاص ہی ضم ہو دوسری سورۃ نہ ہو؟
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/15 (698 )
وتروں میں مشابہ سے دعائے قنوت بھول جانے پرکیا پڑھناچاہئے؟ اور ایسی حالت میں سجدہ سہو کرناہوگا یانہیں؟
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/15 (848 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ وتروں کے مسبوق کواپنے فوت شدہ رکعت میں قنوت پڑھنی چاہئے یانہیں؟
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/15 (1049 )
کیاحکم ہے اہل شریعت کا اس مسئلہ میں کہ ایک شخص نمازوتر کی تیسری رکعت میں بعد الحمد وقل کے تکبیرکہہ کر دعائے قنوت کے بدلے میں تین بار قل ہواﷲ شریف پڑھ لیتا ہے اور دعائے قنوت اس کو نہیں آتی ہے پس اس کی نماز وتر کی صحیح ہوتی ہے یانہیں؟ اور اگروہ ہرروز سجدہ سہوکرلیاکرے تونماز وتر اس کی صحیح ہوجایاکرے گی؟ بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/20 (819 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ جسے امام کے پیچھے نمازو وتر میں بھی رکعتیں فوت ہوئیں اور قنوت بھی وہ جب اپنی باقی نمازپڑھنے کو کھڑا ہو تواخیر رکعت میں دعائے قنوت دوبارہ پڑھے یاوہی جوامام کے پیچھے پڑھی کافی ہے۔ بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/20 (855 )
"دوسہ مردم درآں مسجد کہ امام بجماعت تراویح مشغول تام ست حاضر گردیدند آنہا نمازفرض بجماعت ادانمایند یاجداگانہ خواندہ خواندہ ملحق جماعت تراویح شوند وبازوتر راہمراہ اما بخوانند یا تنہا چراکہ امام رابجماعت فرض نیافتہ، بیّنواتوجروا۔

دوتین آدمی مسجد میں آئے توامام نمازتراویح میں مصروف تھا، کیا یہ آنے والے اپنے فرض کی ادائیگی کے لئے جماعت کرائیں یاعلیحدہ علیحدہ پڑھیں اور اس کے بعدتراویح کی جماعت میں شامل ہوں، اور کیایہ لوگ وتر امام کے ساتھ جماعت سے اداکریں یا اس امام کی جماعت کے ساتھ فرض ادا نہ کرنے کی وجہ سے وتر علیحدہ پڑھیں؟ بیان کرو اجرپاؤ ۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/20 (1036 )
آپ کے مبارک قلم سے فتوٰی یوں جاری ہوا ہے کہ جوشخص عشاء کی نماز یعنی فرض جماعت سے پڑھ چکاہے خواہ خودامام بنا، یاکسی دوسرے امام کے ساتھ جماعت میں پڑھ چکا ہو اس کو اس امام کے ساتھ باجماعت وترپڑھنے کااختیار ہے، ہاں جوشخص اکیلے فرض اداکرے اس کووتر بھی اکیلے پڑھنے چاہئیں علامہ شامی نے ردمحتارمیں یونہی بیان کیاہے فقط حالانکہ فوائد الاعمال جوکہ قاضی محمد تقی فیروزپوری کی تصنیف ہے اور فیروزپورمیوات کے علاقہ سے تعلق رکھتاہے اور یہ کتاب علم فقہ میں معتبرہے، اس میں انہوں نے لکھاہے کہ فرض کے بعد واجب کا درجہ ہے لہٰذا سنت جماعت کی وجہ سے واجب کو یعنی وتر کو ترک کرنا اور سنت یعنی تراویح کواداکرنا کب جائز ہوسکتاہے اس لئے لازم ہے کہ وتر باجماعت اداکرکے باقی تراویح کوبعد مین پڑھے اگرچہ اس نے فرض اکیلے ہی پڑھے ہوں، یہی حکم کتب فقہ میں ہے اور شامی جلداول صفحہ ۴۷۶، اور طحطاوی جلد اول صفحہ ۲۹۷، اور ردالمحتار اور تزکیۃ القیام مصنفہ مولانا عبدالحق محدث دہلوی میں لکھا ہے کہ اگرچہ فرض جماعت سے ادانہ کئے ہوں تب بھی ضروری ہے کہ وتر جماعت سے اداکرلے، اب سوال یہ ہے کہ فرض باجماعت ادانہ کئے ہوں تب بھی وترجماعت سے اداکرنا جائز ہیں یاجائز نہ ہونے کاقطعی حکم ہے، مطلع فرمائیں، اس فقیرسے اگرگستاخی ہوئی ہو تومعاف فرمائیں اور طوالت کے ڈرسے اصل عبارت موقوف کردی ہے۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/22 (1793 )
ماقولکم رحمکم اﷲ تعالٰی فی الرجل الذی اقتدی بالامام فی التراویح وقد صلی الفرض فی بیتہ اومع غیرذلک الامام ھل یصلی الوتر بالجماعۃ ام لا والوتر بالجماعۃ تابع لرمضان ام لجماعۃ الفرض بینواتوجروا۔اﷲ تعالٰی آپ پررحم فرمائے، آپ کا کیا ارشاد ہے ایسے شخص کے بارے میں جس نے فرض اکیلے گھرمیں پڑھے یاکسی دوسرے امام کے ساتھ جماعت میں پڑھے کیاوہ شخص باجماعت تراویح والے امام کے پیچھے وترباجماعت پڑھ سکتاہے یانہیں؟ اور وتر باجماعت رمضان کے تابع ہے یافرض کی جماعت کے تابع ہیں، بیان کروا اجرپاؤ۔(ت)
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/22 (883 )
دورکعت تراویح کی نیت کی قعدئہ اولٰی بھول گیاتین پڑھ کربیٹھا اور سجدہ کیاتو نماز ہوئی یانہیں اور ان رکعتوں میں جوقرآن شریف پڑھا اس کااعادہ ہویانہیں اور چارپڑھ لیں تو یہ چاروں تراویح ہوئیں یانہیں؟ بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

Published by Admin2 on 2012/10/22 (899 )
کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ امام جماعت تراویح میں مشغول ہے اب چندآدمی آئے وہ فرض جماعت سے پڑھیں توکوئی حرج ہے یانہیں؟ بیّنواتوجروا۔
فتاویٰ رضويه جلد ہفتم باب الوتر و النوافل
  Print article

RSS Feed
show bar
Quick Menu