• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Fiqh > Q. & Ans. > Juma & Eid Prayer / جمعہ و عیدین > قریب جمعہ والی مسجد بد مذہبوں کی ہو تو کیا کریں؟

قریب جمعہ والی مسجد بد مذہبوں کی ہو تو کیا کریں؟

Published by Admin2 on 2013/11/18 (755 reads)

New Page 1

مسئلہ۱۳۶۳:  از کراچی صدر بازار دفتر انجمن جمعيۃ الاحناف مرسلہ ابوالرجا غلام رسول صاحب ۲۸رمضان المبارک ۱۳۳۷ھ

جناب تقدس مآب، مجمع مکارم اخلاق، منبع محاس اشفاق، سراپا اخلاق نبوی، مظہر اسرار مصطفوی۔ سلطان العلماء اہلسنت، برہان الفضلاء الملۃ، قدوۃ شیوخ الزمان، مولٰنا المخدوم ، بحرالعلوم، اعلٰحضرت، امام الشریعت والطریقت ، مجدد مائۃ حاضرۃ، متع اﷲ المسلمین ،بطول بقائہم ودامت علی روس المسترشیدین فیوضاتکم وبرکاتکم، بعد سلام مسنون واشتیاق روز افزوں آنکہ بحکم شاوروا ( مشورہ طلب کرو۔ت) حضرت سے التماس ہے ایک عرصہ ہواغربائے اہلسنت کراچی کی صدائے محزون نے تاحال کوئی اثر پیدا نہیں کیا، جمعہ وعیدین جماعت کی جیسی کچھ تکلیف ہے ناقابل بیان ہے لہذا دعا فرمائے، اس وقت حضور پرنور وارث سجاد رسالتمآب صلی اﷲ تعالٰی  علیہ وسلم ہیں، اﷲ تعالٰی  جناب کی دعا کی برکت سے ہم فقیروں کے لئے جامع اہلسنت پیدا کردے کہ صدر کے مسلمانانِ اہلسنت فریضہ جمعہ ادا کرسکیں، صدر میں دومسجدیں ہیں، اس وقت دونوں پر تصرف ایسی طاقتوں کا ہے کہ جن کے نزدیک دینداری اور مذہب معاذ اﷲ جنون ہے یا اہلسنت کی موجودہ مشہور ومتعارف صورت کہ جس پر ہم اور ہمارے شیوخ کرام ہیں والعیاذ باﷲ تعالٰی  شر ک وبدعت ہے لہذا جامع احباب ومتعلقین تراویح وفرائض ایک کرایہ کے مکان میں جو وسیع اور قابل انعقاد محافل ہے ادا کرلیا کرتے ہیں جمعہ جاکر ایک مسجد جو صدر سے قریباً میل بھر کے فاصل پرہو گی یا کم وبیش پہنچ کرادا کرلیتے ہیں لیکن بعض کو یہ مسجد قریب پڑجاتی ہے اور بعض کو دقت ہوتی کیا ایسا ہوسکتا ہے کہ ایک ایسے مکان میں جو کرایہ کا مکان ہو جمع ہو کر جمعہ وعیدین ادا کرسکتے ہیں جناب مجددیہ سے جو فرمان ہو خواہ ہاں یا نہ ،قوم کو اور میری تسلی ہوجائے گی۔

الجواب

جناب محترم ذی المجد والکرم اکرم اﷲ تعالٰی  ، السلام علیکم ورحمۃ اﷲ وبرکاتہ،، جمعہ کے لئے شہر کا یا فنائے شہر کے سوا نہ مسجد شرط ہے نہ بنا، مکان میں بھی ہوسکتا ہے میدان میں بھی ہوسکتا ہے اذن عام درکار ہے ،بدائع امام ملک العلماء میں ہے :السلطان اذاصلی فی دارہ ان فتح باب دارہ جاز وان لم یاذن للعامۃ لاتجوز ۱؎ ۔( ملخصاً)

سلطان نے اگر اپنی دار میں نماز جمعہ پڑھی اگر دروازہ کھلا تھا توجائزاور اگر عوام کو شرکت کی اجازت نہ تھی تو جائز نہیں۔(ت)

 (۱؎ بدائع الصنائع    فصل فی بیان شرائط ا لجمعہ    مطبوعہ ایچ ایم سعید کمپنی کراچی    ۱/۲۶۹)

درمختار میں  ہے  :یشترط لصحتھا المصر اوفنائہ وھو ماحولہ لاجل مصالحہ کدفن ا لموتی ورکض الخیل ۲؎ (ملخصا) واﷲ تعالٰی  اعلم۔

صحتِ جمعہ کے لئے شہر یا فنائے شہر کا ہونا ضروری ہے فنائے سےشہر مراد شہر کے اردگرد جگہ ہے جو شہر کی ضروریات کے لئے بنائی گئی ہو،مثلاً قبرستان اور گھڑ دوڑ کے لئے جگہ ۔ واﷲ تعالٰی  اعلم (ت)

 (۲؎ درمختار        باب الجمعہ         مطبوعہ مطبع مجتبائی دہلی        ۱/۱۰۹)


Navigate through the articles
Previous article جمعہ کے بارے امام اعظم و صاحبین کے اقوال جمعۃ الوداع کے خطبۃ الوداع سے متعلق سوالات Next article
Rating 2.75/5
Rating: 2.7/5 (237 votes)
The comments are owned by the poster. We aren't responsible for their content.
show bar
Quick Menu