• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Fiqh > Q. & Ans. > Death / Funeral / Graves / موت / جنازہ / قبر > مرتے وقت صرف لا الہ الا اللہ کہنا کافی ہے؟

مرتے وقت صرف لا الہ الا اللہ کہنا کافی ہے؟

Published by Admin2 on 2013/12/14 (2239 reads)
Page:
(1) 2 3 »

New Page 1

مسئلہ نمبر ۲: ازپٹنہ ڈاکخانہ گلزاری باغ محلہ ترپولیہ متصل ہسپتال زنانہ، مرسلہ باقر علی حکاک۔

۹ رجب ۱۳۲۹ھ

مع فتوائےعبدالحکیم پٹنوی کہ وقتِ مرگ صرفلا الٰہ الّااﷲکہے کہ رسول اﷲ صلی اﷲ تعالٰی  علیہ وسلم نے فرمایا ہے: مرنے والوں کولا الٰہ الّا اﷲکی تلقین کرومحمد رسول اﷲملانے کو نہیں فرمایا اور فرمایا۔جس کا پچھلا کلاملا الٰہ الّا اﷲہوتو وہ جنّت میں گیا، یہاں بھیمحمد رسول اﷲنہیں فرمایا، تو اگرلا الٰہ الّا اﷲکے بعدمحمد رسول اﷲکا لفظ بڑھایا جائے تورسول اﷲ صلی اﷲ تعالٰی  علیہ وسلم کے حکم کے خلاف ہونے کے سبب بُرا اور منع ہو۔المجیب عبدالحکیم صادق پوری۔

اس کے رَد میں مولٰنا عبدالواحد صاحب مجددی رام پوری کا رسالہ''وثیقہ بہشت '' اس ساتھ تھا، تحریر فقیر بر''وثیقہ بہشت''۔

الجواب

بسم اﷲ الرحمٰن الرحیم۵ اللھم لک الحمد۔اﷲ عزّوجل خیر کے ساتھ شہادتین پر موت نصیب کرے۔ وقتِ مرگ بھی پورا کلمہ طیبہ پڑھنا چاہئے۔جو اسے منع کرتا ہے مسلمان اس کے اغواواضلال پر کان نہ رکھیں کہ وہ شیطان کی اعانت چاہتا ہے۔امام ابن الحاج مکی قدس سرہ الملکی  مدخل میں فرماتے ہیں کہ دمِ نزع دو۲ شیطان آدمی کے دونوں پہلو پر آکر بیٹھتے ہیں ایک اُس کے باپ کی شکل بن کر دوسرا ماں کی۔ ایک کہتا ہے وہ شخص یہودی ہوکر مرا تو یہودی ہوجا کہ یہود وہاں بڑے چین سے ہیں۔ دوسرا کہتا ہے وہ شخص نصرانی گیا تو نصرانی ہوجا کہ نصارٰی  وہاں بڑے آرام سے ہیں۱؎۔

(۱؎ المدخل لابن الحاج    فتنہ المختصر        مطبوعہ داارلکتب العربی بیروت    ۳ /۲۴۱)

علمائے کرام فرماتے ہیں شیطان کے اغوا کے بچانے کے لئے محتضر کو تلقینِ کلمہ کا حکم ہوا۔ ظاہر ہے کہ صرف لا الٰہ الا اﷲ اس کے اغوا کا جواب نہیں، لا الٰہ الا اﷲ تویہود و نصارٰی  بھی مانتے ہیں، ہاں وہ کہ جس سے اس ملعون کے فتنے مٹتے ہیں محمد رسول اﷲ کا ذکر کریم ہے صلی اﷲ تعالٰی  علیہ وسلم۔ یہی اس کے ذریات کے بھی دل میں چُبھتا جگر میں زخم ڈالتا ہے، مسلمان ہرگزہرگز اسے نہ چھوڑیں اور جو منع کرے اُس سے اتنا کہہ دیں کہ''گر بتوحرام است حرامت بادا'' (اگر یہ تجھ پر حرام ہے تو حرام رہے۔ت)مجمع بحارالانوار میں ہے :سبب التلقین انہ یحضرالشیطان لیفسد عقدہ، والمراد بلاالٰہ الا اﷲ الشھادتان۲؎ ۔تلقین کا سبب یہ ہے کہ اُس وقت شیطان آدمی کا ایمان بگاڑنے آتا ہے،اور لا الٰہ الّا اللہ سے پورا کلمہ طیّبہ مراد ہے۔

 (۲؎ مجمع بحارالانوار    تحت لفظ''لقن''    مطبوعہ نولکشور لکھنؤ     ۳ /۲۶۲)

فتح القدیر میں ہے :المقصودمنہ التذکیر فی وقت تعرض الشیطان۳؎ ۔تلقین سے مقصود تعرض شیطان کے وقت ایمان  یاد دلانا ہے۔

 (۳؎ فتح القدیر      باب الجنائز      مطبوعہ  مکتبہ نوریہ رضویہ سکھر        ۲ /۶۸)

اسی طرح تبیین الحقائق اورفتح اﷲ مبین وغیرہ میں ہے۔مرقاۃ شرح ،شکوٰۃ میں علامہ میرک سے ہے:من کان اٰخر کلامہ لا الٰہ الّااﷲ المراد مع قرینتہ فانہ بمنزلۃ علم لکلمۃ الایمان۱؎ ۔حدیث میں جو فرمایا کہ جس کا پچھلا کلام لا الٰہ الّااﷲہواُس سے مراد پورا کلمہ طیبہ ہے کہ لا الٰہ الّااﷲگویااس کلمہ ایمان کانام ہے۔

 (۱؎ مرقات شرح مشکوٰۃ    باب مایقال عند من حضرۃ الموت    فصل ثانی  مطبوعہ مکتبہ امدادیہ ملتان    ۴ /۱۵)

دُرر غرر میں ہے :یلقن بذکر شہادتین عندہ لان الاولی لا تقبل بدون الثانیۃ ۲؎ ۔کلمہ طیّبہ کے دونوں جُز میّت کو تلقین کئے جائیں اس لئے کہ لا الٰہ الّا اللہ بےمحمد رسول اﷲ کے مقبول نہیں۔

 (۲؎ دررشرح غررملّاخسرو    باب الجنائز       مطبوعہ مطبعۃ احمد کامل الکائنہ فی دارالسعادت بیروت    ا/۱۶۰)

غنیـہ ذوی الاحکام میں اس پر تقریر فرمائی،تنویر الابصار میں ہے:یلقن بذکر الشہادتین۳؎دونوں شہادتیں تلقین کی جائیں۔

 ( ۳؎ تنویرالابصار متن الدرالمختار    باب صلٰوۃ الجنائز      مطبوعہ مطبع مجتبائی دہلی      ۱ /۱۱۹)

دُر مختار میں ہے :لان الاولی لاتقبل بدون الثانیۃ۴؎کہ پہلی بے دوسری  کے مقبول نہیں۔

 (۴؎ درمختار شرح تنویر الابصار       باب صلٰوۃ الجنائز       مطبوعہ مطبع مجتبائی دہلی       ۱/۱۱۹)

المختصر القدوری میں ہے:لقن الشھادتین ۵؂پوراکلمہ سکھایا جائے۔

 (۵ ؂المختصر للقدوری   باب الجنائز       مطبوعہ مطبع مجیدی کانپور بھارت      ص۴۴)

Page:
(1) 2 3 »

Navigate through the articles
Previous article آدمی مرنے کے قریب ہو تو کیا کرے جنازہ کے ساتھ نعتیہ غزلیں پڑھنے کا حکم Next article
Rating 2.91/5
Rating: 2.9/5 (279 votes)
The comments are owned by the poster. We aren't responsible for their content.
show bar
Quick Menu