• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Fiqh > Q. & Ans. > Death / Funeral / Graves / موت / جنازہ / قبر > بزرگوں کے مزارات پر لوبان جلانے کا حکم

بزرگوں کے مزارات پر لوبان جلانے کا حکم

Published by Admin2 on 2014/9/17 (762 reads)

New Page 1

مسئلہ ۱۴۸ـ:ا ز جوناگڑھ کا ٹھیا واڑ سرکل مدار المہام مرسلہ مولوی امیر الدین صاحب ۱۰ ذی قعدہ ۱۳۱۵ھ

کیا فرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ کسی بزرگ کے مزار پرلوبان جلانا شرع شریف میں کیا حکم رکھتا ہے؟ اور جو شخص جلانے والے کو فاسق اور بدعتی کہے اس کا کیا حکم ہے ؟ بینوا توجروا

الجواب

عود لوبان وغیرہ کوئی چیز نفسِ قبر پر رکھ کرجلانے سے احتراز چاہئے اگر چہ کسی برتن میں ہولما فیہ من التفاؤل القبیح بطلوع الدخان علی القبر والعیاذ باﷲ ( کیونکہ اس میں قبر کے اوپر سے دھواں نکلنے کا بُرا فال پایا جاتاہے،

اورخدا کی پناہ ۔ ت) صحیح مسلم شریف میں حضرت عمرو بن العاص رضی اﷲ تعالٰی عنہ سے مروی:انہ قال لابنہ وھو فی سیاق الموت اذاانامت فلا تصٰحبنی نائحۃ ولانارا۱؎ الحدیث۔انھوں نے دم مرگ اپنے فرزند سے فرمایا جب میں مرجاؤں تو میرے ساتھ نہ کوئی نوحہ کرنے والی جائے نہ آگ جائے ۔ الحدیث (ت)

 (۱؎ صحیح مسلم   کتاب الایمان    نور محمد اصح المطابع کراچی ۱/ ۷۶)

شرح المشکوٰۃ للامام ابن حجر المکی میں ہے :لانھا من التفاؤل القبیح ۲؎ ( کیونکہ آگ میں فال بد ہے ت) مرقاۃ شرح مشکوٰۃ میں ہے:انھا سبب للتفاؤل القبیح ۳؎ ( یہ فال بدکاسبب ہے ۔ت)

 (۲؎ مرقاۃ بحوالہ امام ابن حجر مکی    کتاب الجنائز     مکتبہ الحبیبیہ کوئٹہ    ۴/ ۱۹۶)

(۳؎ مرقاۃ شرح مشکوٰ،ۃ        کتاب الجنائز     مکتبہ الحبیبیہ کوئٹہ    ۴/ ۱۹۶)

اورقریب قبر سلگا کر اگر وہاں کچھ لوگ بیٹھے ہوں نہ کوئی تالی یا ذاکر ہو بلکہ صرف قبر کے لیے جلا کر چلاآئے تو ظاہر منع ہے کہ اسراف و اضاعتِ مال ہے۔ میّت صالح اس غرفے کے سبب جو اس کی قبر میں جنت سے کھولا جاتاہے او ربہشتی نسیمیں بہشتی پھولوں کی خوشبوئیں لاتی ہیں، دنیا کے اگر لوبان سے غنی اور معاذاﷲ جو دوسری حالت میں ہو اسے اس سے انتفاع نہیں۔ تو جب تک سند مقبول سے نفع معقول نہ ثابت ہو سبیلِ احتراز ہے۔ولایقاس علی الورد والریا حین المصرح باستحبابہ فی غیر ماکتاب کما اوردناعلیہ تصریحات کثیرۃ فی کتابنا حیاۃ الموات فی بیان سماع الاموات، فان العلۃ فیہ کما نصوا علیہ انھا مادامت رطبۃ تسبح اﷲ تعالٰی فتؤنس المیّت لاطیبھا۔اس کا قیاس پھولوں پر نہیں ہوسکتا جن کے مستحب ہونے کی صراحت متعدد کتابوں میں موجود ہے جیساکہ

ا س پر کثیر تصریحا ت ہم نے اپنی کتاب حیاۃ الموات فی بیان سماع الاموات میں نقل کی ہیں اس لیے حسبِ تصریح علماء ان کے استحباب کی علت یہ ہے کہ وہ پھول جب تک تر رہیں گے اﷲ تعالٰی کی تسبیح کرتے اور میّت کا دل بہلاتے رہیں گے__ خوشبودار ہونا علّت نہیں (ت)

اوراگر بغرض حاضرین وقت فاتحہ خوانی یا تلاوت قرآن مجید وذکر الہٰی سلگائیں تو بہتر ومستحسن ہے۔وقد عھد تعظیم التلاوۃٰ والذکر وتطییب مجالس المسلمین بہ قدیما وحدیثا۔اور تلاوت وذکر کی تعظیم اور اس سے مسلمانو ں کی مجلسوں میں خوشبو پھیلانا زمانہ قدیم وجدید میں متعارف ہے (ت)

جو اسے فسق وبدعت کہے محض جاہلانہ جرأت کرتا ہے یا اصول مردود وہابیت پر مرتاہے۔ بہر حال یہ شرع مطہرپر افترا ہے، اس کا جواب انھیں دو آیتوں کا پڑھنا ہے :قل ھاتوا برھانکم ان کنتم صٰدقین ۱؎ قل اٰﷲ اذن لکم ام علی اﷲ تفترون ۔۲؎ واﷲ تعالٰی اعلمتم کہو اپنی دلیل لاؤ اگر سچے ہو___ تم کہو کیا خدا نے تمھیں اذن دیا ہے یا اﷲپر افترا کرتے ہو۔ (ت) واﷲ تعالٰی اعلم

(۱؂القرآن         ۲/ ۱۱۱)       (۲؂القرآن            ۲/ ۱۱۷)


Navigate through the articles
Previous article پرانے,نئے قبرستان سے متعلق دیوبند کے فتوے کاحکم مردہ کو معلوم ہوتا ہے کہ کون اسکی قبر پر آیا؟ Next article
Rating 2.90/5
Rating: 2.9/5 (219 votes)
The comments are owned by the poster. We aren't responsible for their content.
show bar
Quick Menu