• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Fiqh > Q. & Ans. > Namaz / Salat / Prayer / نماز > پنجگانہ نماز میں کونسی نماز کس نبی نے پہلے پڑھی

پنجگانہ نماز میں کونسی نماز کس نبی نے پہلے پڑھی

Published by Admin2 on 2012/5/17 (6915 reads)
Page:
(1) 2 3 4 ... 15 »

New Page 1

مسئلہ (۲۴۹): از اوجین مکان میرخادم علی صاحب اسسٹنٹ مرسلہ مُلّا یعقوب علی خان۱۵جمادی الاولٰی ۱۳۱۰ھ

کیا فرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ نماز پنجگانہ میں کون سی نماز سب سے پہلے کس نبی نے پڑھی ہے اور اگلے انبیاء علیہم الصلاۃ والسلام اور اُن کی امتوں پر بھی یہی نماز پنجگانہ فرض تھی یا یہ ہمارے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کا اور ہمارا خاصہ ہے۔ بینّوا توجروا۔

الجواب

الحمدللّٰہ وحدہ والصلوٰۃ والسلام علی من لانبی بعدہ وعلی اٰلہ وصحبہ المکرمین عندہ۔      

اللہ ہی کیلئے تعریف ہے جو اکیلا ہے اور صلاۃ وسلام اس ہستی پر جس کے بعد کوئی نبی نہیں ہے اور اس کے آل واصحاب پر جو اس کے ہاں بہت مکرم ہیں۔

نماز پنجگانہ اللہ عزّوجل کی وہ نعمتِ عظمٰی ہے کہ اس نے اپنے کرمِ عظیم سے خاص ہم کو عطا فرمائی ہم سے پہلے کسی امت کو نہ ملی، بنی اسرائیل پر دو۲ ہی وقت کی فرض تھی وہ بھی صرف چار۴ رکعتیں دو۲ صبح دو۲ شام، وہ بھی ان سے نہ نبھی سنن نسائی شریف میں انس رضی اللہ تعالٰی عنہ سے مروی حضور سید عالم صلی اللہ تعالٰی علیہ وسلم حدیثِ معراج مبارک میں ارشاد فرماتے ہیںثم ردت الی خمس صلوات، قال: فارجع الٰی ربک فاسألہ التخفیف فانہ فرض علٰی بنی اسرائیل صلاتین فماقاموا بھما ۱؎یعنی پھر پچاس ۵۰ نمازوں کی پانچ رہیں موسٰی علیہ الصلاۃ والسّلام نے عرض کی کہ حضور پھر جائیں اور اپنے رب سے تخفیف چاہیں کہ اس نے بنی اسرائیل پر دو۲ نمازیں فرض فرمائی تھیں وہ انہیں بھی بجانہ لائے۔

 (۱؎ سنن النسائی    کتاب الصلوٰۃ    مطبوعہ نور محمد کارخانہ تجارت کتب کراچی    ۱/۷۸    )

علّامہ زرقانی شرح مواہب میں فرماتے ہیں: ورد ان بنی اسرائیل کلفوا برکعتین بالغداۃ ورکعتین بالعشی۔ قیل، ورکعتین عند الزوال، فماقاموا بماکلفوا بہ ۲؎۔

روایت ہے کہ بنی اسرائیل کو دو۲ رکعتیں صبح اور دو رکعتیں رات کو پڑھنے کا مکلف بنایاگیا تھا۔ بعض نے کہا ہے کہ دو۲ رکعتیں زوال کی بھی تھیں مگر وہ اس پر کاربند نہ رہ سکے۔

(۲؎ شرح الزرقانی علی المواہب    المقصد الخامس فی المعراج والاسراء مطبوعہ المطبعۃ العامرہ مصر    ۶/۱۴۲)

اور امتوں کا حال خدا جانے مگر اتنا ضرور ہے کہ یہ پانچوں اُن میں کسی کو نہ ملیں علماء نے بے خلاف اس کی تصریح فرمائی، مواہب شریف بیان خصائص امت مرحومہ میں لکھا:ومنھا مجموع الصلوات الخمس، ولم تجمع لاحد غیرھم ۳؎۔اور ان خصوصیات میں سے پانچ نمازوں کا مجموعہ بھی ہے کیونکہ اُمتِ مسلمہ کے علاوہ کسی اور اُمت کیلئے پانچ نمازیں جمع نہیں کی گئیں۔

(۳؎ المواھب اللدنیۃ    المقصد الرابع خصائص تعلق بالصلوٰۃ،    المکتب الاسلامی، بیروت    ۲/۷۱۱)

رح زرقانی مقصد معراج مقدس میں زیر حدیث مذکور نسائی لکھا: ھذا ھوالصواب، وماوقع فی البیضاوی انہ فرض علیھم خمسون صلاۃ فی الیوم واللیلۃ، فقال السیوطی: ھذا غلط، ولم یفرض علی بنی اسرائیل خمسون صلاۃ قط بل ولاخمس صلاۃ، ولم تجمع الخمس الالھذہ الامۃ، وانما فرض علی بنی اسرائیل صلاتان فقط، کما فی الحدیث ۱؎۔

یہی درست ہے اور جو بیضاوی میں ہے کہ بنی اسرائیل پر دن رات میں پچاس نمازیں فرض کی گئی تھیں، تو سیوطی نے کہا کہ یہ غلط ہے ، ان پر پچاس نمازیں کبھی بھی فرض نہیں کی گئی تھیں بلکہ ان پر تو پانچ نمازیں بھی فرض نہیں تھیں، پانچ صرف اس امت کیلئے جمع کی گئی ہیں۔ بنی اسرائیل پر تو صرف دو۲ نمازیں فرض تھیں، جیسا کہ حدیث شریف میں ہے۔

(۱؎ شرح الزرقانی علی المواہب     فی المقصد الخامس تخصیصہ علیہ السلام بخصائص المعراج والاسراء     مطبوعہ المطبعۃ العامرہ مصر ،   ۶/۱۴۱)

Page:
(1) 2 3 4 ... 15 »

Navigate through the articles
Previous article نماز کے دوران قطرے آنے کا حکم نماز نہ پڑھنے والے کو مشرک کہنا کیسا؟ Next article
Rating 2.84/5
Rating: 2.8/5 (299 votes)
The comments are owned by the poster. We aren't responsible for their content.
show bar
Quick Menu