• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Fiqh > Q. & Ans. > Namaz / Salat / Prayer / نماز > قومہ و جلسہ میں دیر تک ٹھہرنے کا حکم

قومہ و جلسہ میں دیر تک ٹھہرنے کا حکم

Published by Admin2 on 2012/7/11 (1200 reads)

New Page 1

مسئلہ نمبر ۴۰۸:    ازگونڈھ ملک اودھ مدرسہ اسلامیہ مرسلہ حافظ عبدالعزیز صاحب مدرس مدرسہ مذکورہ۔

۱۳ جمادی الاخری ۱۳۱۸ھ

بعض مقلدین وغیر مقلدین عموماً قومہ و جلسہ میں دیر تک ٹھہرتے ہیں، یہ کیسا ہے؟

الجواب

قومہ و جلسہ کے اذکارِ طویلہ نوافل پر محمول ہیں و لہذاہمارے ائمہ فرائض میں انھیں مسنون نہیں جانتے اور شک نہیں کہ فرائض میں تطویل فاحش خلاف سنّت ہے اور امام کے لئے توقطعاً ممنوع جبکہ مقتدیوں میں کسی پر بھی گراں ہو، ہاں منفرد بعض کلماتِ ماثورہ بڑھائے تو حرج بھی نہیں ، یونہی امام بھی جبکہ مقتدی محصور اور سب راضی ہوں ، رہا مقتدی وہ آپ ہی اتباعِ امام کرے گا ، اگر امام کہے، کہے ورنہ نہیں۔

وفی الدرالمختار یجلس بین السجدتین مطمئنا ولیس بینھما ذکر مسنون و کذالیس بعد رفعہ من الرکوع دعاء وکذا لایاتی فی رکوعہ وسجود بغیر التسبیح علی المذھب وماورد محمول علی النفل ۱؎۔درمختار میں ہے نمازی دو سجدوں کے درمیان جلسہ میں اطمینان سے بیٹھے ، دو سجدوں کے درمیان کوئی ذکر سنت نہیں۔اسی طرح رکوع سے کھڑے ہونے کے بعد قومہ میں کوئی دعا مسنو ن نہیں ۔ اسی طرح رکوع وسجود میں تسبیح کے علاوہ کوئی دعا نہ کرے ، صحیح مذہب یہی ہے اور جو روایات میں آیا ہے وہ نوافل پر محمول ہے (ت)

 (۱؎دُرمختار        باب صفۃ الصلٰوۃ        مطبوعیہ مجتبائی دہلی        ۱/ ۷۶)

محرر مذہب سیدنا اما م محمد رحمہ اﷲ تعالٰی جامع صغیر میں فرماتے ہیں:قال ابویوسف سالت ابا حنیفۃ عن الرجل یرفع راسہ من الرکوع فی الفریضۃ ویقول اللھم اغفرلی قال یقول ربنا لک الحمد و یسکت (کذلک) بین السجدتین یسکت ۲۔امام ابویوسف بیان کرتے ہیں کہ میں نے امام ابو حنیفہ سے اس شخص کے بارے میں پُوچھا جو فرائض میں رکوع کے بعد سر اُٹھانے کے بعد یہ کہتا ہے اللھم اغفرلی (اے اﷲ مجھے معاف فرما) ۔آپ نے فرمایا :وہ صرف ربنا لک الحمد (اے رب ہمارے ! تیرے لئے حمد ہے)کہے پھر خاموش ہوجائے اور اسی طرح دونوں سجدوں کے درمیان جلسہ میں بھی خاموش رہے (ت)

 (۲؎ الجامع الصغیر امام محمد بن الحسن الشیبانی    باب فی رکبیر الرکوع والسجود    مطبوعہ مطبع یوسفی لکھنؤ        ص۱۲۔۱۱)

حلیہ میں زیر قول متن ولا یزید علی ھذا (اس پر اضافہ نہ کرے ۔ت) فرمایا۔ان ارادالزیادۃ ماورد فی السنۃ فینبغی ان یکون ھذا فی حق الا مامۃ اذاخاف التثقیل علی القوم وفی حق المقتدی اذالم یفعل الامام ذلک اماالمنفرد او الامام اذاکان لایثقل علی القوم اتیانہ بذلک اوالمقتدی اذاکان امامہ قد اتی بہ فلیسوا بممنوعین من زیادتھم بہ علی ذلک ولا سیماالمنفرد فی النوافل ومن ادعی ذلک فعلیہ البیان ۱؎۔اگر زیادتی سے مراد اذکار ہیں جو سنت میں وارد ہیں تو یہ حقِ امامت کے بارے میں ہوگا جبکہ مقتدی بوجھ محسوس کریں اور مقتدی کے حق میں اس وقت ہے جب امام یہ نہ پڑھ رہا ہو ، رہا معاملہ منفرد یا وہ امام جس کے مقتدی اس کے پڑھنے کو بوجھ محسوس نہ کریں یا وہ مقتدی جس کا امام پڑھ رہا ہو تو ایسی صورت میں ان کے لئے ان اذکار کا اضافہ ممنوع نہیں ،خصوصاً وہ منفرد جو نوافل پڑھ رہا ہو اور جو اسکا مدعی ہو وہ اس پر دلیل لائے۔(ت)

 (۱؎ حلیۃ المحلی شرح منیۃ المصلی)

اسی میں دو ورق بعد ہے:صرح مشائخنا یحمل مافی حدیث علی رضی اﷲ تعالٰی عنہ علی النوافل علی انہ ثبت فی المکتوبۃ فلیکن فی حالۃ الانفراد وفی حالۃ کونہ اماما والمامومون محصورون لا یثقلون بذلک کما نصت علیہ الشافعیۃ ولا ضیر فی التزامہ۲؎الخ واﷲ سبحٰنہ تعالٰی اعلم۔ہمارے مشائخ نے اس بات کی تصریح کی ہے کہ حضرت سیدنا علی رضی اﷲ تعالٰی عنہ سے مروی حدیث کو نوافل پر محمول کیا جائے گا علاوہ ازیں فرائض میں یہ ثابت ہے تو اس وقت جب نمازی تنہا فرائض ادا کر رہا ہو یا امامت کی حالت میں اس وقت جب مقتدی محصور ہوں جو بوجھ محسوس نہ کریں  جیسا کہ شوافع نے تصریح کی ہے اور اس کے التزام میں کوئی نقصان نہیں الخ واﷲ سبحٰنہ وتعالٰی اعلم (ت)

 (۲؎ حلیۃ المحلی شرح منیۃ المصلی )


Navigate through the articles
Previous article بیماری میں کھڑے ہو کر تکبیر کہہ سکتا ہوتو؟ نماز میں سبحانک اللہم پڑھنا فرض ہے یا واجب؟ Next article
Rating 2.76/5
Rating: 2.8/5 (271 votes)
The comments are owned by the poster. We aren't responsible for their content.
show bar
Quick Menu