• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Fiqh > Q. & Ans. > Imam / امامت > امام رکوع و سجود درست نہ کرے اسکی امامت کا حکم

امام رکوع و سجود درست نہ کرے اسکی امامت کا حکم

Published by Admin2 on 2012/7/29 (852 reads)

New Page 1

مسئلہ نمبر ۷۴۰:از بھنڈارامحلہ کھم تالاب    مسئولہ نجم الدین ریڈر ڈپٹی کلکٹر    ۱۹رمضان ۱۳۳۹ھ

کیا فرماتے ہیں علمائے دین کہ ایک حافظ نمازِ پنجگانہ و جمعہ کے امام ہیں جن کی جسمی حالت بسبب مرض حسب ذیل ہے،آیا اُن کے پیچھے نماز ہوتی ہے یا نہیں؟

(۱) پیش امام صاحب ہر نماز میں سجدہ جاتے وقت نصف یا نصف سے کم جھک جانے پر اﷲ اکبرکی ابتدا کیا کرتے ہیں اور سجدہ سے اُٹھتے وقت نصف یا زائد اُٹھجانے پر اﷲ اکبرکی ابتداء کیا کرتے ہیں یہ ا س لئے کرتے ہیں کہ مقتدی اُ ن سے پہلے سجدے سے اُٹھنے یا سجدے میں جانے نہ پائیں۔

(۲) بقاعدہ مذہب حنفی دونوں زانوں پر ہاتھ رکھتے ہوئے پہلے زمین پر گھٹنے بعد ازاں ہاتھ وغیرہ سجدے کے لئے مطلق نہیں رکھ سکتے اور اسی طرح کھڑے بھی نہیں ہوسکتے ۔

(۳) سجدہ میں جاتے وقت ایک دم لمبے ہوکر دونوں ہاتھ زمین پر رکھتے ہیں اور پیروں کو برابر کیا کرتے اور اسی طرح سجدے سے اُٹھتے وقت بھی لمبا ہوکر اُٹھا کرتے ہیں کیونکہ ان کے دونوں پیر مَرض سے بیکار ہوگئے ہیں۔

(۴)بایاں پَیر گھٹنے کے نیچے زیادہ تر بیکار ہے اس لئے ہر جلسہ میں پَیر بچھانے کے لئے انھیں دقت ہوتی ہے اکثر ہاتھ سے پَیر اُٹھا کر بچھاتے ہیں تب بیٹھتے ہیں یا بعض موقع پر اونٹ کی بیٹھک کی مانند بیٹھ کر دوسرا سجدہ کرلیتے ہیں۔

(۵) قرأت میں دم پُھولتا ہے دم بدم منہ سے سانس خارج کرتے ہیں بے محل وقف ہوجایا کرتا ہے،ایسے امام کے پیچھے نماز ہوجاتی ہے یا نہیں؟بینواتوجروا

الجواب: یہ پانچوں باتیں کہ سوال میں لکھی ان میں سے کوئی مانع صحت نماز نہیں، نہ ان میں کہیں فعلِ کثیرہے،یہ محض گمان غلط ہے، ان میں کہیں ترک واجب بھی نہیں سوائے صورت چہارم کی اس شق کے کہ بعض وقت دو سجدوں کے درمیان سیدھے نہیں بیٹھتے صرف یہ صورت ترکِ واجب کی ہے اس سے اُسے ممانعت کی جائے ،اگر وہی علم وتقویٰ میں زائد ہے تو اسی کی امامت رکھیں ،ہاں اگر اسی کا کوئی استحقاق نہیں اور دوسرے اس سے احق موجود ہیں تو جو احق ہے اُسی کی امامت اولیٰ ہے۔

ففی الحدیث عن النبی صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم اجعلو اائمتکم خیارکم فانھم وفد کم فیما بینکم و بین ربکم۱؎۔واﷲ تعالٰی اعلم۔نبی اکرم صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم کا ارشاد مبارک ہے: اپنے امام اپنے سے بہتر لوگوں کو بناؤ کیونکہ وہ تمھارے اور تمھارے رب کے درمیان نمائیندہ ہوتے ہیں(ت)

 (۱؎ سنن الدارقطنی ، ب تخفیف القراء ۃ الحا جۃ ،مطبوعہ نشرالسنۃ ملتان ،  ۲/۸۸)

اور اسے چاہئے کہ سجدہ کو جاتے یا سجدہ سے اُٹھتے وقت اﷲ اکبر کی ابتداء کرے اور ختم انتقال پر ختم کرے مقتدیوں کی رعایت جو وہ کرتا ہے عکسِ مقصود ِشرع ہے:

حدیث میں فرمایا:انما جعل الاما لیوتم بہ ۲؎ (امام اس لئے بنایا جاتا ہے کہ اس کی اتباع کی جائے ۔ت)

 (۲؎ صحیح البخاری    باب الصلوٰۃ فی السطوح الخ    مطبوعہ قدیمی کتب خانہ کراچی ۱/۵۵)

یہ بات کہ ایسا نہ کرے تو مقتدی اُس سے پہلے سجدہ کرلیں گے اس کا لحاظ مقدیوں پر ضرور ہے جب اسے سجدہ تک پہنچنے میں دیر ہوتی تو یہ انتظارکریں اور ایسے وقت سجدہ کو جھکیں کہ اس کے ساتھ سجدہ میں پہنچیں

بذلک امرالنبی صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم اصحابہ رضی اﷲ تعالٰی عنھم(نبی اکرم صلی اﷲ تعالیی علیہ وسلم نے اپنے اصحاب رضی اﷲ تعالٰی عنہم کویہی حکم دیا ہے۔ت)واﷲ تعالٰی اعلم


Navigate through the articles
Previous article نماز کس کس کے پیچھے پڑھ سکتے ہیں اور کس کے نہیں؟ قرآن بھولنے کے عادی امام کی امامت کیسی ہے؟ Next article
Rating 2.80/5
Rating: 2.8/5 (259 votes)
The comments are owned by the poster. We aren't responsible for their content.
show bar
Quick Menu