• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Fiqh > Q. & Ans. > Jamaat / باجماعت نماز > تارک الجماعت کسے کہتے ہیں؟

تارک الجماعت کسے کہتے ہیں؟

Published by Admin2 on 2012/8/9 (1001 reads)

New Page 1

مسئلہ ۸۶۹ : ازجامع مسجد    ۱۸جمادی الاولٰی ۱۳۱۴ہجری

کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ تارک الجماعت کس کو کہتے ہیں؟ بینواتوجروا

الجواب

 تارک جماعۃ وہ کہ بے کسی عذر شرعی قابل قبول کے قصداً جماعت میں حاضر نہ ہو مذہب صحیح معتمد پراگر ایک بار بھی بالقصد ایسا کیاگنہگار ہوا تارک واجب ہوا مستحق عذاب ہوا والعیاذباﷲ تعالٰی اور اگر عادی ہو کہ بارہا حاضرنہیں ہوتا اگرچہ بارہا حاضربھی ہوتا ہو تو بلاشبہہ فاسق فاجر مردودالشہادۃ ہے فان الصغیرۃ بعدالاصرار تصیر کبیرۃ (صغیرہ اصرار کی بنا پر کبیرہ ہوجاتاہے۔ت) درمختار میں ہے:

 (الجماعۃ سنۃ مؤکدۃ للرجال) قال الزاھدی ارادوابالتاکید الوجوب (وقیل واجبۃ وعلیہ العامۃ) ای عامۃ مشائخنا وبہ جزم فی التحفۃ وغیرھا قال فی البحر وھوالراجح عنداھل المذھب (فتسن اوتجب) ثمرتہ تظھر فی الاثم بترکہا مرۃ ۱؎۱ھ مختصراً۔ (جماعت مردوں کے لئے سنت مؤکدہ ہے) زاہدی نے کہا یہاں تاکید سے مرادوجوب ہے (بعض نے کہا ہے کہ جماعت واجب ہے اور اکثرعلماء کی رائے یہی ہے) یعنی ہمارے اکثر مشائخ کی رائے یہی ہے اسی پرتحفہ وغیرہ میں جزم کیاہے، بحر میں ہے کہ اہل مذہب کے ہاں یہی راجح ہے (پس سنت ہو یاواجب) اس کا ثمرہ اختلاف ایک بارترک کرنے پر گناہ کی صورت میں سامنے آئے گا۱ھ مختصراً(ت)

 (۱؎ درمختار        باب الامامۃ        مطبوعہ مطبع مجتبائی دہلی        ۱ /۸۲)

ردالمحتار میں ہے:قولہ، قال فی البحر وقال فی النھر ھو اعدل الاقوال واقواھا ولذا قال فی الاجناس لاتقبل شہادتہ اذاترکہااستخفافا ومجانۃ اماسہوااوبتاویل ککون الامام من اہل الاھواء اولایراعی مذھب المقتدی فتقبل ۲؎۱ھ طاس کاقول، کہابحر میں ہے اور کہانہر میں ہے کہ یہی معتدل اور قوی قول ہے اور اسی لئے اجناس میں ہے جب کسی نے سستی اور ہلکاسمجھتے ہوئے جماعت کوترک کیا تو اس کی شہادت قبول نہ ہوگی، ہاں اگرسہواً ترک ہو یاتاویلاً جیسے امام کا اہل ہوا میں سے ہونا یامذہب مقتدی کی رعایت نہ کرنے والا ہو توپھر شہادت قبول ہوجائے گی ۱ھ ط(ت) واﷲ سبحٰنہ، وتعالٰی اعلم

 (۲؎ ردالمحتار        باب الامامۃ        مطبوعہ مصطفی البابی مصر    ۱ /۴۱۰)


Navigate through the articles
Previous article امام کےساتھ ایک مقتدی ہوتواسےکس طرح پیچھےکھینچے نماز کے وقت موجود ہو مگر جماعت سے نہ پڑھے Next article
Rating 2.82/5
Rating: 2.8/5 (280 votes)
The comments are owned by the poster. We aren't responsible for their content.
show bar
Quick Menu