• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Fiqh > Q. & Ans. > Namaz / Salat / Prayer / نماز > مرد کو ریشمیں کپڑا پہن کرنماز کیسی ہے؟

مرد کو ریشمیں کپڑا پہن کرنماز کیسی ہے؟

Published by Admin2 on 2012/8/26 (932 reads)

New Page 1

مسئلہ ۹۹۰: ازکلکتہ دھرم تلانمبر۶ مرسلہ جناب مرزاغلام قادربیگ صاحب ۱۲ رمضان المبارک ۱۳۱۱ھ

کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ مرد کو ریشمیں کپڑا پہن کرنماز کیسی ہے؟ اور جب امام باوصف معلوم ہوجانے حرمت کے لباس ریشمیں پہن کرامامت کیاکرے توساری جماعت کی نماز میں کراہت تحریمی کاوبال امام پرہوگایانہیں؟

الجواب

فی الواقع ریشمیں کپڑاپہن کرنمازمرد کے لئے مکروہ تحریمی ہے کہ اسے اتار کرپھرپڑھنا واجبکما ھو معلوم من الفقہ فی غیر ما موضع(جیسا کہ فقہ میں متعدد مقامات پرموجود ہے۔ت) شرح مقدمہ غزنویہ پھر فتاوٰی انقرویہ میں ہے:تکرہ الصلٰوۃ فی ثوب الحریر وعلیہ ایضا لانہ محرم علیہ لبسہ فی غیرالصلٰوۃ ففیہا اولی فان صلی فیھا صحت صلاتہ لان النھی لایختص بالصلٰوۃ ۱؎ انتھیریشمی کپڑے میں اور اس کے اوپرنماز مکروہ ہے کیونکہ جب نماز کے علاوہ اسے پہننا حرام ہے تو نماز میں بطریق اولٰی حرام ہوگا، اگران میں نماز ادا کی توصحیح ہوگی کیونکہ نہی نماز کے ساتھ ہی مخصوص نہیں انتہی

 (۱؎ فتاوٰی انقرویہ    کتاب الصلوٰۃ    مطبوعہ دارالاشاعت قندھار، افغانستان    ۱ /۷)

اقول وقولہ وعلیہ ایضا مبتن علی قولھما من حرمۃ افتراش الحریر والا فھو جائز عندالامام الاعظم رضی اﷲ تعالٰی عنہ لان المحرم لبسہ لاسائر وجوہ الانتفاع۱؎ کما فی ردالمحتار وغیرہ نعم تکرہ الصلاۃ علیہ وان جاز افتراشہ لان الصلٰوۃ لیست موضع الترفہ وھذہ الکراھۃ تنزیھیا۔اقول اس کاقول ''ریشمی کپڑے پربھی'' صاحبین کے اس قول پرمبنی ہے کہ ریشم کابچھونا بنانا بھی حرام ہے ورنہ امام اعظم رضی اﷲ تعالٰی عنہ کے نزدیک جائزہے کیونکہ ریشم کاپہننا حرام ہے باقی نفع کی صورتیں منع نہیں جیسا کہ ردالمحتار وغیرہ میں ہے، ہاں اگرچہ اس کابچھونا بنانا جائز ہے مگر اس پرنماز مکروہ ہوگی کیونکہ نمازتعیش کامقام نہیں اور یہ کراہت تنزیہی ہوگی۔(ت)

 ( ۱؎ ردالمحتار    فصل فی اللبس    مطبوعہ ایچ ایم سعیدکمپنی کراچی    ۶ /۳۵۴)

جبکہ اﷲ عزوجل نے مرد کو ریشمیں کپڑاگھر میں پہننا حرام کیا تو خود اس کے دربار میں اسے پہن کرحاضر ہونا کس درجہ گستاخی وبے ادبی ہوگا، جوبات گھربیٹھ کرتنہائی میں کرناتو قانون سلطانی میں جرم ہو وہ خود بارگاہ سلطانی میں اس کے حضور کھڑے ہوکر کرنا کیسی صریح بیباکی اور بادشاہ کاموجب ِ ناراضی ہوگا والعیاذ باﷲ تعالٰی اور پُرظاہر کہ نماز امام کی یہ کراہت نماز مقتدیان کی طرف بھی سرایت کرے گی تو اُن سب کی نمازیں خراب وناقص ہونے کا یہی شخص باعث ہوا اور معاذاﷲ ارشاد حضرت مولوی قدس سرہ المعنوی کامصداق ٹھہر۱ ؎

                    بے ادب تنہا نہ خود را داشت بد

                    بلکہ آتش درھمہ آفاق زد (بے ادب تنہا اپنے آپ کوہی تباہ نہیں کرتا بلکہ اس ایک کی بے ادبی تمام عالم کو برباد کردیتی ہے)

بعینہٖ یہی حکم ان سب چیزوں کاہے جن کاپہننا ناجائز ہے جیسے ریشمیں کمربندیامغرق ٹوپی یاوہ کپڑا جس پرریشم یا چاندی یا سونے کے کام کاکوئی بیل بُوٹا چارانگل سے زیادہ عرض کا ہو یا ہاتھ خواہ پاؤں میں تانبے سونے چاندی پیتل لوہے کے چھلّے یاکان میں بالی یابُندا یاسونے خواہ تانبے پیتل لوہے کی انگوٹھی اگرچہ ایک تارکی ہو یاساڑھے چارماشے چاندی یا کئی نگ کی انگوٹھی یاکئی انگوٹھیاں اگرچہ سب مل کر ایک ہی ماشہ کی ہوں کہ یہ سب چیزیں مردوں کوحرام وناجائز ہیں اور اُن سے نمازمکروہ تحریمی اور تانبے پیتل لوہے کے زیور توعورتوں کو بھی حرام ہیں انہیں پہن کر اُن کی نماز بھی مکروہ تحریمی، ان مسائل کی تفصیل ہمارے فتاوٰی میں ہے اﷲ عزوجل مسلمانوں کوہدایت فرمائے۔ واﷲ تعالٰی اعلم۔


Navigate through the articles
Previous article امام دروازے میں کھڑے ہو کر جماعت کروائے توکیسا ہے؟ انگریزی وضع کے کپڑے پہنناکیسا؟ اور نماز کا حکم Next article
Rating 2.71/5
Rating: 2.7/5 (270 votes)
The comments are owned by the poster. We aren't responsible for their content.
show bar
Quick Menu