• Qur'an

    In Qur'an section, we will upload translations of Qu'an in different languages. The best Urdu translation of Qur'an is "Kanzul Iman", Alhamdulillah it has been translated in many languages of the world. In this section you can also read online the great Tafaseer (Commentary) of Qu'ran, including TAFSEER-E-NAEEMI and others.

    more »

     
  • Hadith

    In Hadith section, you will be able to read online the different collections of Hadith, translation and commentary on Hadith (Sharha). We will try to upload upload Hadith with Urdu translations and Urdu Sharha of Hadiths, in scanned and unicode format, In Sha Allah.

    more »

     
  • Fiqh

    Fiqh section contains big collection of Fatawa written by Sunni Ulema (Scholars of Islam). Alhamdulillah most of the fatawa collections are brought online for the first time. You can find solution of any issue as per the guidance of Qur'an and Sunnah. It includes, Fatawa Ridawiyyah, Fatawa Amjadiyyah, Fatawa Mustafviyyah and a lot more.

    more »

     
  • Dedication

    This website is particularly dedicated to the Revivalist of Islam in the 14th century, i.e. Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi Alaihir Rahmah. We want to bring online the uttermost research work being carried out over his personality and works around the globe. For further details visit "Works on Alahazrat" Section

    more »

     
  • Books of Alahazrat

    Books written by Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi contain extensive research on various branches of Islamic arts & sciences. This website gives you an opportunity to explore this hidden treasure. You can dip into this sea of knowledge by visiting this section

    more »

     
  • Fatawa Ridawiyyah

    Fatawa Ridawiyyah is one of the greatest writtings of Alahazrat Imam Ahmad Raza Khan Bareilvi. The new translated version of this historical Fatawa consists of 30 volumes and more than 21000 pages. Reading this fatawa with care and memorizing the principles mentioned therein, can take the reader to a big height in Islamic Jurisprudence.

    more »

     
  • Sunni Library

    - Sunni Library is a collection of core Islamic Literature. You can read online the great work and contribution of Sunni Islamic scholars worldwide in general and by the Scholars of Sub Continent in particular.

    more »

     
Login
Username:

Password:

Remember me



Lost Password?

Register now!
Main Menu
Themes

(2 themes)
Fiqh > Q. & Ans. > Nawafil & Witr / وتر و نوافل > تہجد میں حضورکے پاؤں متورم ہونا اورپھٹنا ثابت ہے

تہجد میں حضورکے پاؤں متورم ہونا اورپھٹنا ثابت ہے

Published by Admin2 on 2012/8/30 (1042 reads)

New Page 1

مسئلہ ۱۰۳۷:از ملک بنگالہ ضلع چاٹگام ڈاکخانہ جلدی مرسلہ محمد حبیب اﷲ صاحب  ۸ جمادی الاخری ۱۳۱۷ھ

چہ می فرمایند علمائے دین اندریں مسئلہ کہ جناب قاضی ثناء اﷲ صاحب درمالا بدمنہ آوردہ اند کہ آنحضرت صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم درصلٰوۃ تہجد قیام بسیارمی فرمودند حتی کہ درپائے مبارک آنحضرت صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم ورم ومنشق شدہ است، قول مذکور قابل اعتباراست یانہ وورم ومنشق درصحاح ستہ ثابت است یاخارج ازصحاح بعض عالم می گویند کہ ورم قدم مبارک آنحضرت صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم درصحاح ستہ ثابت است ومنشق ثابت نیست قول کدام کس معتبراست بیّنوابسندالکتاب وتوجروامن اﷲ الوھاب۔

اس مسئلہ میں علماء کی کیارائے ہے کہ مالابدمنہ میں قاضی ثناء اﷲپانی پتینے ذکرکیاہے کہ آنحضرت صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم نمازتہجد میں قیام طویل فرماتے حتی کہ آپ کے پاؤں مبارک متورم ہوجاتے اور پھٹ جاتے، یہ قول قابل اعتبار ہے یانہیں، متورم ہونا اور پھٹنا دونوں صحاح ستہ سے ثابت ہیں یاصحاح کے علاوہ سے،بعض علماء کایہ کہنا ہے کہ مبارک قدموں کامتورم ہونا تو صحاح سے ثابت ہے مگر پھٹ جانا ثابت نہیں، کس کاقول معتبرہے؟ مسئلہ کتاب کے ساتھ بیان کریں اور عطاکرنے والے اﷲ تعالٰی سے اجرپائیں۔

الجواب

ایں جاسخن قاضی درست وسوی ست انکارش ازنادیدہ روی ست، تورم وانشقاق ہردودرصحاح ستہ خبرایں سنن ابی داؤد مروی ست ودرجامع صحیح امام بخاری ست حدثنا صدقۃ بن فضل اخبرنا ابن عیینہ ثنازیاد انہ سمع المغیرۃ یقول قام النبی صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم حتی تورمت قدماہ فقیل لہ قد غفراﷲ لک ماتقدم من ذنبک وما تاخرقال افلااکون عبدا شکورا۱؎

قاضی صاحب کاکلام درست وصحیح ہے اس کاانکار ناواقفیت ہے، پاؤں کامتورم ہونا اور پھٹ جانا دونوں ہی صحاح ستّہ سے ثابت ہیں، یہ خبرسنن ابی داؤد اور جامع صحیح امام بخاری میں مروی ہے کہ ہمیں صدقہ بن فضل انہیں ابن عیینہ انہیں زیاد نے بتایا کہ میں نے حضرت مغیرہ رضی اﷲ تعالٰی عنہ کو یہ بیان کرتے ہوئے سنا کہ رسالت مآب صلی اﷲ حسن بن عبدالعزیزانہیں عبداﷲ بن یحیٰی انہیں حیوۃ رضی اﷲتعالٰی عنہ سے سنا کہ رسالت مآب صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم رات کو قیام فرماتے حتی کہ آپ صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم کے قدم مبارک پھٹ جاتے، میں نے عرض کیا: یارسو ل اﷲ! اتنی مشقت کیوں اٹھاتے ہوحالانکہ اﷲ تعالٰی نے آپ کے اگلے اور پچھلے معاملات پر مغفرت وبخشش کی ضمانت فراہم کردی ہے تو آپ صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم نے فرمایا : کیامیں اس کا شکرگزاربندہ نہ بنوں؟

 (۱؎ صحیح البخاری    سورۃ الفتح زیرقول لیغفرلک اﷲ الخ    مطبوعہ قدیمی کتب خانہ کراچی     ۲ /۷۱۶)

حدثنا الحسن بن عبدالعزیز ثناعبداﷲ بن یحٰیی اخبرنا حیوۃ عن ابی الاسود انہ سمع عروۃ عن عائشۃ رضی اﷲ تعالٰی عنھا ان نبی صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم کان یقوم من اللیل حتی تنفطر قدماہ فقالت عائشۃ لم تصنع ھذا یارسول اﷲ وقد غفر اﷲ لک ماتقدم من ذنبک وما تأخر قال افلا احب ان اکون عبداشکورا۱؎ الحدیث قال البخاری فی کتاب الصلٰوۃ تفطر قدماہ الفطور الشقوق انفطرت انشقت۲؎اھ  واﷲ تعالٰی اعلم۔

حسن بن عبدالعزیز انہیں عبداللہ بن یحیی حیوۃ انہیں ابو الاسود نے بیان کیا کہ میں نے حضرت عروۃ رضی اللہ تعالی عنہ سے سنا کہ حضرت عائشہ رضی اللہ تعالی عنہا نے فرمایا کہ رسالت مآب صلی اللہ تعالٰی علیہ وسلم رات کو قیام فرماتے حتی کہ آپ صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم کے مبارک قدم پھٹ جاتے میں نے عرض کیا یارسول اللہ اتنی مشقت کیوں اٹھاتے ہو حالانکہ اللہ تعالی آپ کے اگلے اور پچھلے معاملات پر مغفرت و بخشش کی ضمانت فراہم کردی ہے ۔ تو آپ صلی اللہ تعالی علیہ وسلم نے فرمایا کیا میں اس کا شکر گذار بندہ نہ بنوں؟ اس حدیث کو امام بخاری نے کتاب الصلٰوۃ میں ذکر کر کے فرمایا: تفطر قدماہ الفطور کامعنی پھٹ جانا ہے کیونکہ انفطرت اور انشقت دونوں کامعنی ''پھٹ جانا'' ہے   اھ واﷲتعالٰی اعلم

 (۱؎ صحیح البخاری    سورۃ الفتح زیرقول لیغفرلک اﷲ الخ    مطبوعہ قدیمی کتب خانہ کراچی    ۲ /۷۱۶)

(۲؎ صحیح البخاری    باب قیام النبی صلی اﷲ تعالٰی علیہ وسلم الخ    مطبوعہ قدیمی کتب خانہ کراچی۱ /۵۲)


Navigate through the articles
Previous article سنتیں گھر میں پڑھنا افضل ہے یامسجد میں؟ نمازعشا میں آخری نفل بیٹھکرپڑھنا چاہئےیا نہیں Next article
Rating 2.79/5
Rating: 2.8/5 (265 votes)
The comments are owned by the poster. We aren't responsible for their content.
show bar
Quick Menu